خطبہ فدکیہ کی تشریح

کلمۂ توحید کو عقل سے پہچاننے کی طاقت، خطبہ فدکیہ کی تشریح
01/23/2019 - 14:20

خلاصہ: خطبہ فدکیہ کی تشریح کرتے ہوئے بائیسواں مضمون تحریر کیا جارہا ہے۔ اللہ تعالیٰ کی معرفت دل سے بھی ممکن ہے جو فطرت کا راستہ ہے اور عقل سے بھی ممکن ہے جس کے ذریعے انسان، اللہ تعالیٰ کے موجود ہونے اور اسے پہچاننے کے لئے دلیل پیش کرتا ہے۔ یہ دونوں ذرائع اللہ تعالیٰ نے انسان میں رکھے ہیں۔

کلمۂ "لاالہ الااللہ" کا دلوں میں قرار پانا، خطبہ فدکیہ کی تشریح
01/21/2019 - 20:18

خلاصہ: خطبہ فدکیہ کی تشریح کرتے ہوئے اکیسواں مضمون تحریر کیا جارہا ہے، اللہ تعالیٰ نے کلمہ توحید کو ہر دل میں رکھا ہے جسے توحیدی فطرت کہا جاتا ہے، انسان توحیدی فطرت کو دل کے ذریعے پاسکتا ہے۔

اخلاص، توحید کی گواہی دینے کا نتیجہ، خطبہ فدکیہ کی تشریح
01/21/2019 - 18:30

خلاصہ: خطبہ فدکیہ کی تشریح کرتے ہوئے بیسواں مضمون پیش کیا جارہا ہے۔ صرف زبان سے "لاالہ الا اللہ" کہہ دینا کافی نہیں، بلکہ اس کے مطابق عمل کرنا بھی ضروری ہے، جب اس گواہی پر عمل کیا جائے گا تو وہ توحید کی گواہی کا نتیجہ ہے، یہ نتیجہ درحقیقت عمل میں اخلاص ہے۔

اللہ کی وحدانیت کی گواہی، خطبہ فدکیہ کی تشریح
01/21/2019 - 16:14

خلاصہ: خطبہ فدکیہ کی تشریح کرتے ہوئے بیسواں تحریر کیا جارہا ہے۔ حضرت فاطمہ زہرا (سلام اللہ علیہا) نے اللہ تعالیٰ کی حمد و ثنا کے بعد، اللہ کی توحید کی گواہی دی ہے۔ اس مضمون میں توحید پر عقیدہ رکھنے اور دیگر اعتقادات کے بارے میں مختصر گفتگو کی جارہی ہے۔

شکر کا جذبہ اور نعمتوں کا اضافہ، خطبہ فدکیہ کی تشریح
01/20/2019 - 20:49

خلاصہ: خطبہ فدکیہ کی تشریح کرتے ہوئے سترہواں مضمون تحریر کیا جارہا ہے۔ نعمت کے بدلے میں نعمت دینے والے کا شکر ادا کرنے پر انسان کا فطری تقاضا، انسان میں جذبہ پیدا کرتا ہے تاکہ شکر ادا کرے اور اللہ تعالیٰ کا شکر کرنا، نعمتوں کے اضافہ ہونے کا باعث بنتا ہے۔

اللہ کی حمد نعمتوں کی کثرت کا باعث، خطبہ فدکیہ کی تشریح
01/20/2019 - 19:50

خلاصہ: خطبہ فدکیہ کی تشریح کرتے ہوئے اٹھارہواں مضمون تحریر کیا جارہا ہے۔ سابقہ مضمون میں شکر، نعمتوں کی کثرت کا باعث تھا اور اس مضمون میں حمد نعمتوں کی کثرت کا باعث ہے۔

نعمتوں کی ابدیّت انسان کے ادراک سے بعید، خطبہ فدکیہ کی تشریح
01/20/2019 - 12:12

خلاصہ: خطبہ فدکیہ کی تشریح کرتے ہوئے پندرہواں مضمون تحریر کیا جارہا ہے۔ کسی چیز کی ابدیّت انسان کے ادراک سے بعید ہے، لہذا اللہ تعالیٰ کی نعمتوں کی ابدیّت بھی انسان کے ادراک سے بعید ہے۔

۱۴۔ نعمتوں کی ابتدا کا بدلہ دے پانا انسان سے بعید، خطبہ فدکیہ کی تشریح
01/20/2019 - 11:04

خلاصہ: خطبہ فدکیہ کی تشریح کرتے ہوئے چودہواں مضمون تحریر کیا جارہا ہے، لفظ امد کے دو معنی ہیں، ان میں سے یہاں پر مقصود جو بھی ہو، دونوں معنی کے مطابق انسان، اللہ تعالیٰ کی نعمتوں کا بدلہ نہیں دے سکتا۔

لا محدود نعمتیں، خطبہ فدکیہ کی تشریح
01/19/2019 - 20:41

خلاصہ: خطبہ فدکیہ کی تشریح کرتے ہوئے، یہ تیرہواں مضمون ہے، حضرت فاطمہ زہرا (سلام اللہ علیہا) کے اس فقرہ سے یہ بات واضح ہوتی ہے کہ اللہ تعالیٰ کی نعمتوں کی تعداد شمار نہیں کیا جاسکتا، کیونکہ نعمتوں کی تعداد گننے سے زیادہ ہے۔

 نعمتوں کی تکمیل کے تواتر پر اللہ کی ثناء، خطبہ فدکیہ کی تشریح
01/19/2019 - 12:19

خلاصہ: خطبہ فدکیہ کی تشریح کرتے ہوئے یہ بارہواں مضمون پیش کیا جارہا ہے۔ حضرت فاطمہ زہرا (سلام اللہ علیہا) نے خطبہ شروع کرتے ہوئے اللہ کی حمد و ثناء کی اور رسول اللہ (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم) پر صلوات بھیجی، یہ سن کر لوگ دوبارہ رونے لگ گئے، جب انہوں نے خاموشی اختیار کی تو آپؑ نے دوبارہ اپنا خطبہ آغاز کیا۔

صفحات

Subscribe to خطبہ فدکیہ کی تشریح
www.welayatnet.com
Online: 40